Wed Feb 21, 2024

اسرائیل کے فضائی حملے، خواتین و بچوں سمیت مزید 80 فلسطینی شہید برازیل نے اسرائیل سے اپنا سفیر واپس بلالیا حزب اللہ نے اسرائیل کے اندر تک سرنگیں بنا رکھی ہیں، فرانسیسی اخبار شہباز شریف وزیراعظم، زرداری صدر، حکومت سازی کا معاہدہ ہوگیا امریکا نے غزہ میں جنگ بندی کی تیسری قرارداد بھی ویٹو کردی سپاہ پاسداران انقلاب کے بری دستوں میں خودکش ڈرونز شامل اسرائیل فلسطینی قیدی خواتین کو بانجھ بنارہا ہے، اقوام متحدہ یمنی فوج کے دشمن کے جہازوں پر حملے، برطانوی جہاز ڈوب گیا خطے میں مزاحمت کی فکری بنیادیں واقعہ کربلا سے جنم لیتی ہیں، صیہونی اخبار یمن نے امریکا اور برطانیہ کو دشمن ملک قرار دے دیا طالبان نے دوحہ مذاکرات کیلئے ناقابل قبول شرائط رکھیں، گوتریس صیہونی فوج کے حملے جاری، مزید 107 فلسطینی شہید، 145 زخمی غزہ جنگ نے اسرائیلی معیشت تباہ کردی، آخری سہ ماہی میں 19.4 فیصد گراوٹ غزہ میں بھوک سے روزانہ درجنوں اموات ہو رہی ہیں، اقوام متحدہ ماہ رمضان میں مسجد اقصیٰ میں فلسطینیوں کا داخلہ محدود کرنے کا فیصلہ

روزانہ کی خبریں

تنظیم کے معاشرہ میں مثبت کردار کا تعلق نظریہ اور اراکین کے ایمان سے ہوتا ہے، علامہ امین شہیدی

راولپنڈی : امت واحدہ پاکستان کے سربراہ علامہ محمد امین شہیدی نے کہا ہے کہ کسی بھی تنظیم کے مضبوط ہونے اور معاشرہ میں مثبت کردار ادا کرنے کا تعلق اس کے نظریہ اور اراکین کے ایمان سے ہوتا ہے۔ ان دونوں کے بغیر تنظیم کا دستور اگرچہ باقی رہتا ہے لیکن اس کی روح ختم ہو جاتی ہے اور تنظیم کی تشکیل کے مقاصد فوت ہو جاتے ہیں۔ امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن راولپنڈی کے تعمیر وطن کنونشن سے خطاب میں علامہ امین شہیدی نے کہاکہ ایمان کے ساتھ بصیرت اور آگہی کا ہونا بہت ضروری ہے اور اگر عقل و معرفت کے ساتھ کسی راستہ کا انتخاب کیا جائے تو مشکلات کے باوجود قدم نہیں ڈگمگاتے۔علامہ امین شہیدی نےکہا کہ آئی ایس او دوسری تنظیموں کی نسبت الگ اور نمایاں خصوصیات کی حامل ہے۔ ان میں سے پہلی خصوصیت یہ ہے یہ کہ آئی ایس او کے اراکین بے داغ ماضی اور پاکیزہ قلب و جذبہ کے ساتھ تنظیم میں داخل ہوتے ہیں۔ اگرچہ دیگر طلبہ تنظیمیں بھی سرگرمِ عمل ہیں لیکن یہ وہ واحد تنظیم ہے جس کی شناخت دین ہے، ہر نوجوان رکن دین کی محبت اور خدمت کے جذبہ کے ساتھ تنظیم میں شامل ہوتا ہے اور عہدہ، مراعات یا پیسے کی لالچ کے بغیر خدمات انجام دیتا ہے۔ دین کی محبت سے مراد زندہ دین کی جستجو ہے جو نوجوانوں کو معاشرتی مسائل کا حل بتانے کے ساتھ انہیں مرکز سے بھی جوڑتا ہے۔ معصومؑ کی ولایت یا معصومؑ کی غیبت کے زمانہ میں ان کے جانشین، فقیہ اور ولی سے اپنے آپ کو متصل کرنا دین سے جُڑنے کے مترادف ہے۔ نظریاتی حوالہ سے ہماری اجتماعی زندگی میں یہ نکتہ بہت اہم ہے کہ ہم اپنے زمانے کے ولی سے جُڑے رہیں۔ دیگر تنظیموں کی نسبت آئی ایس او آج بھی اس نظریہ پر قائم اور عمل پیرا ہے۔

مزید پڑھیے

Most Popular