Wed Feb 21, 2024

اسرائیل کے فضائی حملے، خواتین و بچوں سمیت مزید 80 فلسطینی شہید برازیل نے اسرائیل سے اپنا سفیر واپس بلالیا حزب اللہ نے اسرائیل کے اندر تک سرنگیں بنا رکھی ہیں، فرانسیسی اخبار شہباز شریف وزیراعظم، زرداری صدر، حکومت سازی کا معاہدہ ہوگیا امریکا نے غزہ میں جنگ بندی کی تیسری قرارداد بھی ویٹو کردی سپاہ پاسداران انقلاب کے بری دستوں میں خودکش ڈرونز شامل اسرائیل فلسطینی قیدی خواتین کو بانجھ بنارہا ہے، اقوام متحدہ یمنی فوج کے دشمن کے جہازوں پر حملے، برطانوی جہاز ڈوب گیا خطے میں مزاحمت کی فکری بنیادیں واقعہ کربلا سے جنم لیتی ہیں، صیہونی اخبار یمن نے امریکا اور برطانیہ کو دشمن ملک قرار دے دیا طالبان نے دوحہ مذاکرات کیلئے ناقابل قبول شرائط رکھیں، گوتریس صیہونی فوج کے حملے جاری، مزید 107 فلسطینی شہید، 145 زخمی غزہ جنگ نے اسرائیلی معیشت تباہ کردی، آخری سہ ماہی میں 19.4 فیصد گراوٹ غزہ میں بھوک سے روزانہ درجنوں اموات ہو رہی ہیں، اقوام متحدہ ماہ رمضان میں مسجد اقصیٰ میں فلسطینیوں کا داخلہ محدود کرنے کا فیصلہ

روزانہ کی خبریں

قطر: اسرائیل کیلئے جاسوسی کے الزام میں گرفتار 8 بھارتی شہریوں کی سزائے موت ختم اور رہائی

قطر نے جاسوسی کے الزام میں گرفتار 8 بھارتی باشندوں کو سزائے موت ختم کرنے کے کئی ماہ بعد رہا کردیا۔ ذرائع کے مطابق جن بھارتی باشندوں کو رہا کیا گیا ہے ان پر جاسوسی کا الزام عائد کرکے مقدمہ چلایا گیا تھا۔ یہ سب بھارتی بحریہ کے سابق افسران تھے۔ بھارتی وزارتِ خارجہ نے بتایا کہ اس فیصلے کا سہرا قطر کے امیر کے سر ہے۔ 18 ماہ قبل اس معاملے نے دونوں ممالک کے سفارتی تعلقات میں کشیدگی پیدا کردی تھی۔ ذرائع کے مطابق بھارتی بحریہ کے سابق افسران پر اسرائیل کے لیے جاسوسی کا الزام عائد کیا گیا تھا۔ انہیں گزشتہ اکتوبر میں سزائے موت سنائی گئی تھی جو دسمبر میں ختم کردی گئی۔ عالمی میڈیا کے مطابق قطر سے بھارت واپس پہنچنے والے آٹھ میں سے سات افراد نے کہا کہ ان کی رہائی وزیر اعظم نریندر مودی کی ذاتی دلچسپی کا نتیجہ ہے۔ ان سب کو اگست 2022 میں گرفتار کیا گیا تھا۔ بھارت نے اس معاملے میں قطر سے کئی ماہ تک مذاکرات کیے۔ ان گرفتاریوں اور مقدمے سے قطر اور بھارت کے تجارتی تعلقات بری طرح متاثر ہوئے تھے۔
واضح رہے کہ بھارت توانائی درآمد کرنے والا بڑا ملک ہے جبکہ قطر توانائی کا ایک بڑا برآمد کنندہ ہے۔ گرفتاری کے وقت بھارتی باشندے قطری حکومت کے لیے ایک پرائیویٹ کمپنی کے تحت آبدوز کے منصوبے پر کام کر رہے تھے۔ اس رہائی سے کچھ دن قبل ہی بھارت اور قطر کے درمیان ایک معاہدے پر دستخط ہوئے ہیں جس کے تحت قطر 2050 تک بھارت کو ہر سال 75 لاکھ میٹرک ٹن مائع قدرتی گیس (ایل این جی) فراہم کرے گا۔ قطر کے امیر شیخ تمیم بن حماد الثانی نے دسمبر میں دبئی میں منعقدہ ماحولیاتی کانفرنس COP28 کے موقع پر بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی سے ملاقات کی تھی اور قطر میں بھارتی کمیونٹی کی بہبود سے متعلق امور پر تبادلہ خیال کیا تھا۔ یاد رہے کہ قطر میں کم و بیش 8 لاکھ بھارتی باشندے کام کرتے ہیں۔

مزید پڑھیے

Most Popular