Wed Feb 21, 2024

اسرائیل کے فضائی حملے، خواتین و بچوں سمیت مزید 80 فلسطینی شہید برازیل نے اسرائیل سے اپنا سفیر واپس بلالیا حزب اللہ نے اسرائیل کے اندر تک سرنگیں بنا رکھی ہیں، فرانسیسی اخبار شہباز شریف وزیراعظم، زرداری صدر، حکومت سازی کا معاہدہ ہوگیا امریکا نے غزہ میں جنگ بندی کی تیسری قرارداد بھی ویٹو کردی سپاہ پاسداران انقلاب کے بری دستوں میں خودکش ڈرونز شامل اسرائیل فلسطینی قیدی خواتین کو بانجھ بنارہا ہے، اقوام متحدہ یمنی فوج کے دشمن کے جہازوں پر حملے، برطانوی جہاز ڈوب گیا خطے میں مزاحمت کی فکری بنیادیں واقعہ کربلا سے جنم لیتی ہیں، صیہونی اخبار یمن نے امریکا اور برطانیہ کو دشمن ملک قرار دے دیا طالبان نے دوحہ مذاکرات کیلئے ناقابل قبول شرائط رکھیں، گوتریس صیہونی فوج کے حملے جاری، مزید 107 فلسطینی شہید، 145 زخمی غزہ جنگ نے اسرائیلی معیشت تباہ کردی، آخری سہ ماہی میں 19.4 فیصد گراوٹ غزہ میں بھوک سے روزانہ درجنوں اموات ہو رہی ہیں، اقوام متحدہ ماہ رمضان میں مسجد اقصیٰ میں فلسطینیوں کا داخلہ محدود کرنے کا فیصلہ

روزانہ کی خبریں

ایران: وحدت اسلامی کے داعی مولوی عبد الواحد ریگی اغواء کے بعد شہید

ایرانی بلوچستان کے علاقے خاش میں شیعہ۔سنی وحدت کے داعی و اسلامی انقلاب کے ممتاز حامی اہلسنت امام جمعہ مولود عبدالواحد ریگی کو اغواء کے بعد قتل کر دیا گیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق اپنے ایک بیان میں خاش کے پراسیکیوٹر شمس آبادی نے مسجد امام حسین (ع) کے اہلسنت امام جمعہ مولوی عبدالواحد ریگی کے اغواء اور شہادت کی کارروائی سے پردہ اٹھاتے ہوئے کہا ہے کہ جمعرات کے روز وہ مسجد میں موجود تھے کہ پچھلے دروازے سے داخل ہونے والے نامعلوم افراد نے انہیں بلایا اور فی الفور بغیر نمبر پلیٹ والی گاڑی میں زبردستی بٹھا کر اپنے ساتھ لے گئے۔ شمس آبادی نے میڈیا کو بتایا کہ مولوی عبدالواحد ریگی کے اغواء کے فورا بعد ہی صوبائی پولیس کی جانب سے متعدد ٹیمیں تشکیل دے کر ان کی بازیابی کے لئے سرچ آپریشن شروع کر دیا گیا تھا تاہم افسوس ہے کہ اغواء کاروں کی جانب سے انہیں اٹھانے کے فوراً بعد ہی شہید کر دیا گیا تھا۔ خاش کے پراسیکیوٹر کا کہنا تھا کہ مولوی عبدالواحد کی شہادت کی تصدیق شہر کی ایک نواحی سڑک سے ان کی لاش کی برآمدگی کے بعد کی گئی ہے جبکہ انہیں سر اور گردن میں 3 گولیاں ماری گئی تھیں۔
واضح رہے کہ خاش کے امام جمعہ شہید مولوی عبدالواحد ریگی ایک انقلابی شخصیت اور اتحاد بین المسلمین کے ممتاز داعی تھے جبکہ امریکہ و اسرائیل کے حمایت یافتہ دہشتگردوں کے ساتھ عدم ہمراہی کے باعث وہ ہمیشہ ان کی ہٹ لسٹ پر رہتے تھے۔ رہبر انقلاب اسلامی ایران آیت اللہ سید علی خامنہ ای کے صوبہ سیستان و بلوچستان کے لئے خصوصی نمائندے کے ساتھ ملاقات میں شہید مولوی عبدالواحد ریگی کا کہنا تھا کہ ہم منافقوں و دشمنوں کی سازشوں اور گھناؤنے منصوبوں سے اچھی طرح واقف ہیں جبکہ اسلام، اسلامی نظام حکومت، ایران اور شیعہ سنی وحدت کے علاوہ ہماری کوئی دوسری بات نہیں! ان کا کہنا تھا کہ ہم رہبر انقلاب اسلامی سے محبت رکھتے ہیں جبکہ یہ مملکت، اسلامی نظام حکومت کے بغیر ہمارے ہی کسی کام کی ہے اور نہ ہی دین اسلام و حتی ناموس مسلمین کے کسی کام کی! اس موقع پر انہوں نے وحدت مسلمین کے اپنے موقف کے باعث متعدد دہشتگرد گروہوں کی جانب سے ملنے والی دھمکیوں کی جانب اشارہ کرتے ہوئے تاکید کی تھی کہ وہ شخص جو اپنی دینی و جغرافیائی سرحدوں کی حفاظت نہیں کر سکتا “ناموس” نہیں رکھتا!

مزید پڑھیے

Most Popular