انڈونیشیا، افغان خواتین کو با اختیار بنانے کے لیے مدد کرے گا

  Click to listen highlighted text! جکارتہ : انڈونیشیا کی حکومت افغان خواتین کی تعلیم اور ان کو بااختیار بنانےکے لیے مالی مدد فراہم کرے گی۔ انڈونیشین وزارت خارجہ کے افریقہ اور ایشیا کے ڈائریکٹر جنرل عبدالقادر جیلانی نے گذشتہ ماہ اسلام آباد میں ہونے والے اسلامی تعاون تنظیم کے غیر معمولی اجلاس میں ہونے والے فیصلوں کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ افغانستان کو 28 کروڑ 50 لاکھ ڈالر کی امداد دے گا۔یہ تمام فنڈز خواتین کی صلاحتیوں کو بہتر بنانے اور انہیں اسکالر شپس دینے پر خرچ ہوں گے۔ گذشتہ برس اگست میں افغانستان میں طالبان کے اقتدار میں آنے کے بعد سے ملک کی معاشی صورت حال دگرگوں ہے اور وہاں کی آبادی کا بڑا حصہ غربت اور بھوک کا شکار ہے۔

جکارتہ : انڈونیشیا کی حکومت افغان خواتین کی تعلیم اور ان کو بااختیار بنانےکے لیے مالی مدد فراہم کرے گی۔ انڈونیشین وزارت خارجہ کے افریقہ اور ایشیا کے ڈائریکٹر جنرل عبدالقادر جیلانی نے گذشتہ ماہ اسلام آباد میں ہونے والے اسلامی تعاون تنظیم کے غیر معمولی اجلاس میں ہونے والے فیصلوں کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ افغانستان کو 28 کروڑ 50 لاکھ ڈالر کی امداد دے گا۔یہ تمام فنڈز خواتین کی صلاحتیوں کو بہتر بنانے اور انہیں اسکالر شپس دینے پر خرچ ہوں گے۔ گذشتہ برس اگست میں افغانستان میں طالبان کے اقتدار میں آنے کے بعد سے ملک کی معاشی صورت حال دگرگوں ہے اور وہاں کی آبادی کا بڑا حصہ غربت اور بھوک کا شکار ہے۔