شھید قائد عارف حسین الحسینی کی فرمودات سے چند اقتباسات از کتاب ‘سفیر نور’

  Click to listen highlighted text! “ہم نے ملک میں جمہوریت کی بحالی کے لئے ایک کمیٹی تشکیل دی ہے جو ملک کی دوسری جماعتوں سے رابطے کر کے آمریت کے خاتمے کے لئے لائحہ عمل تیار کرے گی.” لاہور پریس کانفرنس، 1984 اگر ہم ملکی سیاست اور بین الاقوامی امور میں اپنے آپ کو دوسرے مسلمانوں سے الگ تھلگ کر لیں تو یہ نہ صرف شرعی ذمہ داری سے انحراف ہو گا بلکہ یہ اسلام اور قرآن سے روگردانی ہوگی.” رینالہ خورد میں خطاب “ہماری تحریک نے ضیائی اسلام کو ناکام بنا دیا ہے….. ہم نے واضح کر دیا ہے کہ تحریک ملک کے سیاسی امور میں اپنا نمایاں کردار ضرور ادا کرے گی. ” آئ ایس او تنظیم کی مجلس عاملہ کے اجلاس میں خطاب، 1986 “ہمارا مقصد صرف حصول انصاف ہے ہم ملک میں کوئی لا قانونیت اور بد امنی نہیں پھیلانا چاہتے…. ہمارا یہ لانگ مارچ اس وقت تک جاری رہے گا جب تک اسیران کوئٹہ کو رہا نہیں کر دیا جاتا.” کراچی پریس کانفرنس، 1986 ” ہم اس ملک میں جمہوریت اور اعلی اسلامی اقدار کے لیے کوشاں ہیں ہم اپنے مقاصد کے حصول میں کسی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے.” راولپنڈی ریلوے اسٹیشن، 1984 “آج ایم آر ڈی کے اکابرین سے ہماری گفت و شنید کے نتیجے میں طے پایا ہے کہ ہم حکومت کے خلاف انکی جدوجہد میں بھرپور معاونت کریں گے.” لاہور پریس کلب، 21 دسمبر 1984

“ہم نے ملک میں جمہوریت کی بحالی کے لئے ایک کمیٹی تشکیل دی ہے جو ملک کی دوسری جماعتوں سے رابطے کر کے آمریت کے خاتمے کے لئے لائحہ عمل تیار کرے گی.”
لاہور پریس کانفرنس، 1984

اگر ہم ملکی سیاست اور بین الاقوامی امور میں اپنے آپ کو دوسرے مسلمانوں سے الگ تھلگ کر لیں تو یہ نہ صرف شرعی ذمہ داری سے انحراف ہو گا بلکہ یہ اسلام اور قرآن سے روگردانی ہوگی.”
رینالہ خورد میں خطاب

“ہماری تحریک نے ضیائی اسلام کو ناکام بنا دیا ہے….. ہم نے واضح کر دیا ہے کہ تحریک ملک کے سیاسی امور میں اپنا نمایاں کردار ضرور ادا کرے گی. ”
آئ ایس او تنظیم کی مجلس عاملہ کے اجلاس میں خطاب، 1986

“ہمارا مقصد صرف حصول انصاف ہے ہم ملک میں کوئی لا قانونیت اور بد امنی نہیں پھیلانا چاہتے…. ہمارا یہ لانگ مارچ اس وقت تک جاری رہے گا جب تک اسیران کوئٹہ کو رہا نہیں کر دیا جاتا.”
کراچی پریس کانفرنس، 1986

” ہم اس ملک میں جمہوریت اور اعلی اسلامی اقدار کے لیے کوشاں ہیں ہم اپنے مقاصد کے حصول میں کسی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے.”
راولپنڈی ریلوے اسٹیشن، 1984

“آج ایم آر ڈی کے اکابرین سے ہماری گفت و شنید کے نتیجے میں طے پایا ہے کہ ہم حکومت کے خلاف انکی جدوجہد میں بھرپور معاونت کریں گے.”
لاہور پریس کلب، 21 دسمبر 1984