صفائی اور پاکیزگی

  Click to listen highlighted text! اسلام نے لباس، بدن اور زندگی کے دوسرے کاموں میں پاکیزگی اور صفائی پر بہت زور دیا ہے اور صفائی کو نصف ایمان کہا ہے۔ حضور اکرم کا ارشاد ہے:” اللہ تعالیٰ پاک ہے اور وہ پاکیزگی، طہارت اور صفائی رکھنے والے کو دوست رکھتا ہے۔“بدن، لباس اور جوتوں وغیرہ کو آراستہ اور صاف رکھنا اسلامی اخلاقی عمل ہے اور اس کا تعلق ایک پکے اور سچے مسلمان کی ذاتی زندگی میں نظم و ضبط سے ہے۔ اسلامی تعلیمات کی رو سے ہر مسلمان کو اپنے حلیے اور پاکیزگی کا خیال رکھنا چاہیے۔ اپنے لباس اور ظاہر کو بھی سنوارنا چاہیے۔ سر کے بالوں میں کنگھی کرنی چاہیے، اپنے سر کے بالوں کو حد سے زیادہ نہیں بڑھانا چاہیے۔وہ ناخن کاٹے، دانتوں کی صفائی کرے اور با ادب ہو کر چلے۔ایک بار حضور اکرم نے ایک پریشان حال، الجھے بالوں والے شخص کو دیکھا تو فرمایا:”تمہں کوئی چیز نہیں ملی تھی کہ بالوں کو سنوار لیتے۔“نبی اکرم جب بھی مسلمانوں کے اجتماع میں تشریف لے جاتے تو آئینہ دیکھتے، زلفوں اور بالوں کو سنوارتے اور عطر لگا کر گھر سے نکلتے۔ گھر سے نکلتے وقت خودکو سنوارنے کو اللہ کی پسندیدگی بیان فرماتے۔ ہمیں چاہیے کہ دیگر عبادات کے ساتھ ساتھ صفائی کا بھی خیال رکھیں اور خود کو معطر اور پاکیزہ رکھیں۔

اسلام نے لباس، بدن اور زندگی کے دوسرے کاموں میں پاکیزگی اور صفائی پر بہت زور دیا ہے اور صفائی کو نصف ایمان کہا ہے۔ حضور اکرم کا ارشاد ہے:
” اللہ تعالیٰ پاک ہے اور وہ پاکیزگی، طہارت اور صفائی رکھنے والے کو دوست رکھتا ہے۔“
بدن، لباس اور جوتوں وغیرہ کو آراستہ اور صاف رکھنا اسلامی اخلاقی عمل ہے اور اس کا تعلق ایک پکے اور سچے مسلمان کی ذاتی زندگی میں نظم و ضبط سے ہے۔ اسلامی تعلیمات کی رو سے ہر مسلمان کو اپنے حلیے اور پاکیزگی کا خیال رکھنا چاہیے۔ اپنے لباس اور ظاہر کو بھی سنوارنا چاہیے۔ سر کے بالوں میں کنگھی کرنی چاہیے، اپنے سر کے بالوں کو حد سے زیادہ نہیں بڑھانا چاہیے۔وہ ناخن کاٹے، دانتوں کی صفائی کرے اور با ادب ہو کر چلے۔
ایک بار حضور اکرم نے ایک پریشان حال، الجھے بالوں والے شخص کو دیکھا تو فرمایا:
”تمہں کوئی چیز نہیں ملی تھی کہ بالوں کو سنوار لیتے۔“
نبی اکرم جب بھی مسلمانوں کے اجتماع میں تشریف لے جاتے تو آئینہ دیکھتے، زلفوں اور بالوں کو سنوارتے اور عطر لگا کر گھر سے نکلتے۔ گھر سے نکلتے وقت خودکو سنوارنے کو اللہ کی پسندیدگی بیان فرماتے۔ ہمیں چاہیے کہ دیگر عبادات کے ساتھ ساتھ صفائی کا بھی خیال رکھیں اور خود کو معطر اور پاکیزہ رکھیں۔